سفر کیلئے غیرملکی کرنسی لے جانے کی حد مقرر


کراچی : اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بیرون ملک سفر کیلئے غیرملکی کرنسی لے جانے کی سالانہ حد مقرر کردی جو یکم جنوری سے نافذ العمل ہوگی۔

اسٹیٹ بینک اعلامیہ کے مطابق ڈیبٹ یا کریڈٹ کارڈ کے ذریعے بیرون ملک ادائیگی کیلئے زرمبادلہ کی حد مقرر کردی گئی ہے۔

ترجمان اسٹیٹ بینک کا کہنا ہے کہ سفری مقاصد کیلئے غیرملکی کرنسی لے جانے کی حد پرنظر ثانی کی گئی ہے، نظر ثانی شدہ حد کے مطابق 5ہزار امریکی ڈالر کے مساوی کرنسی ایک وقت میں لے جائی جاسکتی ہے۔

18سال سے کم عمر افراد کو فی دورہ 2500امریکی ڈالر کے مساوی کرنسی لے جانے کی اجازت ہے جبکہ بالغ اور نابالغ افراد کیلئے غیرملکی کرنسی لے جانے کی سالانہ حد مقرر بھی کی گئی ہے۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق مذکورہ حد بالترتیب30ہزار امریکی ڈالر اور15ہزار امریکی ڈالر ہوگی، تاہم افغانستان کا سفر کرنے والوں کیلئے غیرملکی کرنسی کی موجودہ حد برقرار رہے گی۔

اسٹیٹ بینک اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ غیرملکی کرنسی کی فی دورہ حدیں فوری طور پر نافذ العمل ہوں گی اور سالانہ حدیں یکم جنوری2023 سے لاگو ہوں گی۔


About admin

Check Also

ٹی ڈی اے کے سابق سربراہ ایس ایم منیر انتقال کرگئے

کراچی: شہر قائد کی معروف کاروباری شخصیت ایس ایم منیر مختصر علالت کے بعد خالق …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *