شہباز حکومت مہنگائی کنٹرول کرنے میں ناکام


اسلام آباد : شہباز حکومت مہنگائی کنٹرول کرنے میں ناکام ہے ، رواں ہفتے مہنگائی کی شرح 32.58 فیصد ریکارڈ کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق ملک میں مہنگائی کاطوفان نہ تھم سکا ، ہفتہ وار بنیادوں پرمہنگائی کی شرح 0.35 فیصد مزید بڑھ گئی۔

آلو،پیاز، ٹماٹر، دودھ ، دہی اور دیگر اشیائے خورونوش کی قیمتیں بھی آسمان سے باتیں کرنے لگیں ،غریب کے لیے دو وقت کی روٹی کا حصول مزید مشکل ہوگیا۔

ادارہ شماریات نے ہفتہ وار مہنگائی کے اعداد و شمارجاری کردئیے ، جس میں بتایا گیا کہ ملک میں مہنگائی کی شرح32.58 فیصدتک ریکارڈ کی گئی۔

ادارہ شماریات کا کہنا ہے کہ ہفتہ وار بنیادوں پر 23 اشیا مزید مہنگی ہوگئیں، ایک ہفتے میں ٹماٹر 5روپے 12 پیسے پھر مہنگےہوئے۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ ایک ہفتے کے دوران 800 گرام نمک کاپیکٹ ایک روپے90پیسے ، کیلے 3روپے 44پیسے فی درجن اور دودھ کا پیکٹ 13 روپے 52 پیسے ، چائے کا پیکٹ4 روپے 30 پیسے اور تازہ دودھ 1 روپے 77 پیسے فی لٹر مہنگا ہوا۔

ادارہ شماریات نے کہا کہ حالیہ ہفتےدہی،چینی،باسمتی چاول،پیازکی قیمت میں بھی اضافہ ہوا۔

اسی طرح ایک ہفتےمیں14 اشیائےضروریہ کی قیمتوں میں کمی ہوئی جبکہ دال مسور 10 روپے 61 پیسے، زندہ مرغی 10 روپے 29 پیسے فی کلوسستی ہوئی۔

اعداد و شمار کے مطابق 20 کلو آٹے کا تھیلا 30 روپے 33پیسےفی کلوسستا ہوکر 1521روپے96 پیسے کا ہوگیا۔

دال ماش 6روپے58پیسے،دال مونگ2روپے84پیسےفی کلوسستی ہوئی جبکہ دال چنا، خوردنی گھی، بیف، لہسن اور انڈے بھی سستے ہوئے۔

ادارہ شماریات کا کہنا تھا کہ ایک ہفتے میں14 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

About admin

Check Also

پاکستان ہے تو کسی اور ملک سے تجارت کیوں کریں، صدر آذربائیجان

باکو / اسلام آباد : آذر بائیجان کے صدر الہام علیوف نے کہا ہے کہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *