ذہنی بے چینی کی بیماری مردوں کے مقابلے میں خواتین میں دگنی ہوتی ہے ، تحقیق

امریکا کی انڈیانا یونیورسٹی کے اسکول آف میڈیسن میں کی جانے والی ایک کے مطابق مردوں کے مقاضبلم میں خاواتین تیں رذہدیگاواتین میں رذہن

انڈیانا یونیورسٹی کے اسکول آف میڈیس میں یہ پتہ لگانے کے لیے کی گئی کہ کس طرح مختلف عوامال میب ب

محققین کے مطابق مردوں کے مقابلے میں خواتین میں ذہنی امراض اکثر ہوتی ہے, جبکہ خواتین میں اس مبتلا ہونے میں سماجی ثقافتی عوامل کے اہم کردار ادا کرنے کے بہت امکانات ہوتے ہیں.

تحقیق میں شامل تھاٹیانے ڈی اولیویرا سرگیو کے مطابق خواتین اس بیماری میں زیادہ مبتلا ہونے کے ساتھ موجودہ عالمی وبا کورونا وائرس بھی لوگوں میں اس بیماری کو بڑے پیمانے بڑھایا ہے.

تحقیقی ٹیم نے نر اور مادہ چوہوں پر کیے گئے تجربے سے یہ نتیجہ اخذ کیا کہ ذہنی بےچینی بیماری میں جنس کما ےااا م بور اوےا ہم ستور عل عل م ا حاا م ستور

اس تحقیق کے نتائج جرنل سائیکو فارماکولوجی میں شائع ہوئی ہے۔ اس تحقیقی ٹیم کی قیادت تھاٹیانے ڈی اولیویرا سرگیو نے کی ، جو ایچ ڈی ہیں اور وہ لیبارٹری ہوف میں بطیںاوا پ میں بطیاوا اپ م بطئیکوا اوف م بطیاور پر سن سن سر سم



About admin

Check Also

عالمی ادارہ صحت نے منکی پاکس بیماری کا نیا نام ’ایم پوکس‘ تجویز کر دیا

عالمی ادارہ صحت نے منکی پوکس بیماری کا نیا نام ’ایم پاکس‘ تجویز کر دیا۔ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *